طوطے اڑانے پر سفاک میاں بیوی نے کمسن ملازمہ کی جان لے لی

طوطے اڑانے پر سفاک میاں بیوی نے کمسن ملازمہ کی جان لے لی

30 views

راولپنڈی میں درندہ صفت میاں بیوی نے غلطی سے طوطے اڑانے پر 8 سالہ کمسن ملازمہ کو تشدد کا نشانہ بنا ڈالا،جس کے بعد دوران علاج بچی دم توڑ گئی۔

تفصیلات کے مطابق افسوسناک واقعہ روالپنڈی میں بحریہ ٹاؤن کے فیز آٹھ میں پیش آیا جہاں 8 سالہ کمسن ملازمہ ظہرا شاہ نے صفائی کرتے

ہوئے اُن کے گھر میں موجود دو قیمتی طوطے غلطی سے پنجرے سے اڑا دیے۔

جس کے بعد گھر کے مالک حسان صدیقی اور ان کی بیوی نے طیش میں آکر بچی کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ حسان صدیقی بچی کو اسپتال میں منتقل کرکے فرار ہوگیا، مگر پولیس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے حسان صدیقی اور

اسکی اہلیہ کو گرفتار کرلیا گیا۔

Image

پولیس کے مطابق  بچی ہسپتال کے انتہائی نگہداشت وارڈ میں وینٹیلیٹر پر تھی، جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے انتقال کرگئی۔

آٹھ سالہ بچی ظہرا شاہ کا تعلق مظفر گڑھ سے تھا جسے گھر کے مالک حسان صدیقی اور ان کی اہلیہ نے اپنے بیٹے کی دیکھ بھال کے لیے رکھا ہوا تھا۔

ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ بچی کے گال، پسلیوں، رانوں اور ٹخنوں پر زخم اور رگڑ لگنے کے نشان موجود تھے جبکہ بچی سے مبینہ طور پر

جنسی زیادتی بھی کی گئی تھی جس کی تصدیق کے لیے خون کے نمونے پنجاب فورینزک سائنس ایجنسی بھیجے گئے ہیں۔

افسوسناک واقعے کی خبر سوشل میڈیا پر آگ کی طرح  پھیل گئی جس کے بعد جسٹس فار ظہرا شاہ کا ہیش ٹیگ ٹاپ ٹرینڈ کرنے لگا جبکہ

صارفین کی جانب سے واقعہ کی پرزور مذمت کا سلسلہ جاری ہے۔

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *