بلدیہ فیکٹری کو بھتہ نہ دینے پر آگ لگائی گئی: جے آئی ٹی رپورٹ

بلدیہ فیکٹری کو بھتہ نہ دینے پر آگ لگائی گئی: جے آئی ٹی رپورٹ

74 views

بلدیہ ٹاؤن فیکٹری سانحے کی تحقیقاتی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 2012 میں آتشزدگی کا واقعہ دہشتگردی کا تھا، 20 کروڑ بھتہ نہ دینے پر بلدیہ فیکٹر کو آگ لگائی گئی۔

تفصیلات کے مطابق 27صفحات پر مشتمل جے آئی ٹی کی رپورٹ میں لکھا گیا ہے کہ بلدیہ ٹاؤن فیکٹری میں آگ 20 کروڑ روپے بھتہ

نہ دینے پر لگائی گئی تھی۔ فیکٹری سے بھتہ ایم کیو ایم کے حماد صدیقی اور رحمان بھولا نے مانگا تھا۔

واقعے کے مقدمے اور تحقیقات میں ملزمان کو فائدہ پہنچانے کی کوشش کی گئی۔ دہشتگردانہ کارروائی کو ایف آئی آر میں پہلے قتل کہا گیا

پھر حادثہ قرار دے دیا گیا۔

جے آئی ٹی نے سانحہ بلدیہ فیکٹری کی نئی ایف آئی آر درج کرنے کی سفارش کی ہے۔

خیال رہے کہ ستمبر 2012 میں بلدیہ ٹیکسٹائل فیکٹری میں آتشزدگی کا واقعہ پیش آیا تھا جس میں 250 افراد جھلس کر جاں بحق ہوگئے تھے۔

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *