کوئٹہ میں دھماکہ پاکستان کا امن کس کی آنکھوں میں کھٹک رہا ہے؟؟

کوئٹہ میں دھماکہ پاکستان کا امن کس کی آنکھوں میں کھٹک رہا ہے؟؟

164 views

لگتا ہے پاکستان کا امن اور سکون ملک دشمن عناصر کو برداشت نہیں ہورہا اور یہ عناصرجب موقع اور مہلت ملتی ہے حملہ آور ہوتے ہیں ۔

فہمیدہ یوسفی

خبروں کے مطابق بلوچستان کے دارالخلافہ کوئٹہ کے زرغون روڈ سرینا چوک پر نجی ہوٹل کی پارکنگ میں دھماکے کے نتیجے میں 4 افراد جاں بحق اور 12 زخمی ہوگئے دھماکہ اس قدر شدید نوعیت کا تھا، جس کی آواز دور دور تک سنی گئی جب کہ دھماکے کے بعد پارکنگ میں کھڑی متعدد گاڑیوں میں بھی آگ لگ گئی۔

ذرائع کے مطابق اس دھماکے میں تیس کلو سے زائد آر ڈی ایکس استعمال ہوا ۔

مذاکرات مفاہمت ضروری کیونکہ ریاست ماں جیسی

محکمہ صحت بلوچستان ڈاکٹر وسیم بیگ کے مطابق سیرینا ہوٹل دھماکے کے زخمیوں اور جان بحق افراد کے نام ذیل ہیں۔

سیرینا ھوٹل دھماکہ کے زخمیوں کے نام

1.اعجاز احمد ولد محمد سرور

2۔بلال شبیر ولد شبیر حسین

3۔عطااللہ ولد عبدالستار

4۔راجہ طاہر ولد طارق عزیز

5۔ نامعلوم

6۔ عرفان ولد عبدالستار

7. عبدالحمید ولد صادق

8.محمد نور ولد اسد خان

9. وزیر ولد منظور

10. بلال قادر ولد موسی خان

11. خداے بخش ولد ساول

12. مزمل خان ولد حمید اللہ

سرینا دھماکے میں شہید افراد

1.اسد اللہ خان

2. نامعلوم

3.نامعلوم

4.نا معلوم

تاہم تازہ اطلاعات کے مطابق کچھ زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے اور ہلاکتوں میں اضافے کا خطرہ ہے۔

جنوری 2021 میں جاری پاکستان انسٹی ٹیوٹ فار پیس اسٹڈیز (پیپس) نے اپنی سالانہ رپورٹ میں کہا گزشتہ برس ہونے والے دہشت گردی کے واقعات سے متعلق بتایا گیا کہ ایک برس پہلے کے مقابلے میں2020 میں دہشت گردی کے واقعات میں36 فیصد کمی آئی ہے پاکستان میں دہشت گردی سنگین مسئلہ نہیں رہا تاہم مذہبی انتہا پسندی اب بھی ایک خطرہ ہے۔

کیا اوائل جنوری میں پاک بھارت مذاکرات ہوئے تھے ؟

اس رپورٹ کے فوری بعد ہی بلوچستان میں مسلح افراد نے فائرنگ کر کے کوئلے کی کان میں کام کرنے والے 11 کان کنوں کو قتل کر دیا تھا جس کے بعد ہونے والے احتجاج نے پورے ملک کے امن کو متاثر کیا تھا۔

ذرائع کے مطابق کوئٹہ سیریینا ہوٹل دھماکے کا نشانہ بھی وہاں موجود چینی سفیر تھے جو دھماکے کے وقت وہاں موجود نہیں تھے

اس حقیقت سے انکار نہیں کیا جاسکتا ملک دشمن قوتیں پاکستان کو ہر ممکن نقصان پہنچانے کے لیے سرگرم ہیں ۔ ان قوتوں کے تانے بانے خطے کی چوہدری بننے کے زعم میں مبتلا بھارت سے جاکر ہی ملتے ہیں۔

پاکستان میں مردم شماری کا خوش آئند فیصلہ

بھارت کو پاکستان کا امن ہمیشہ ہی کھٹکتا ہے اور سی پیک کے بعد سے اس نے اپنے دفاعی اور عسکری اہداف کی مکروہ تکمیل کے لیے بلوچستان کو نشانے پر رکھا ہے اور یہاں موجود مذہبی اورسیاسی فالٹ لائینز کا موقع ملتے ہی استعمال کرتا ہے۔

مودی سرکار کے عزائم دنیا سے بھی ڈھکے چھپے نہیں ہیں کہ پاکستان میں عدم استحکام پیدا کرنے کے لیے وہ افغانستان کی سرزمین کو استعمال کرتا رہا ہےکیونکہ پاکستان خطے میں اس کے چوہدری بننے کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

اسی لیے بلوچستان میں دہشتگردی اور تخریب کاری بھارت کے پیش نظر رہتی ہے اور پاکستان دشمن طاقتوں سے راہ و رسم پیدا کرکے وہ پاکستان میں شورش، تخریب کاری اور دہشتگردی کے ایک گھناؤنے ایجنڈے پر عمل پیرا ہے، چنانچہ کل ہونے والے کوئٹہ دھماکے کی اس بزدلانہ کارروائی کے سرے بھی بھارت سے ہی جاکر ملینگے۔

تاہم شر پسند اور ملک دشمن عناصرکہ یہ مذموم مقاصد کبھی کامیاب نہیں ہونگے۔ پوری قوم دہشت گردی کے خلاف متحد ہے ۔ ملک دشمن قوتیں پاکستان اور خاص طور پر بلوچستان کی ترقی سےخائف ہیں، لیکن دہشت گردی کے واقعات ہمارا حوصلہ پست نہیں کر سکتے۔

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *