لاپتا افراد کیسز :وفاقی سیکریٹری داخلہ کی عدم پیشی پر عدالت برہم

لاپتا افراد کیسز :وفاقی سیکریٹری داخلہ کی عدم پیشی پر عدالت برہم

6 views

عدالت نے لاپتا افراد کیس میں وفاقی سیکریٹری داخلہ ناقابل ضمانت وارنٹ جاری کرنے کا عندیہ دیدیا۔

تفصیلات کے مطابق سندھ ہائیکورٹ میں لاپتا افراد کیس زیرسماعت آیا ، جہاں  عدالت کے سولاات پر ڈپٹی سیکریٹری داخلہ بوکھلا گئے، عدالت نے استفسار کیا کہ ہم آپ سے بات کررہے ہیں سیکریٹری داخلہ نے آپ کو بھیجا ئے تو جواب بھی دیں ۔

جسٹس کے کے آغا کا کہنا تھا کہ کئی بار احکامات کی خلاف ورزی پر سیکریٹری داخلہ کو بلایا تھا۔

دوران سماعت ڈپٹی سیکریٹری کی مسلسل خاموشی پر عدالت نے اظہار برہمی کیا ، جسٹس مبین لاکھو نے جھاڑ پلاتے ہوئے کہا کہ آپ کو انگریزی سمجھ آتی ہے ؟ جس پر ڈپٹی سیکریٹری داخلہ نے جواب دیا یس یس آتی ہے۔

اس دوران جسٹس کے کے آغا نے استفسار کیا کہ آپ کا رویہ عدالت کی توہین ہے ، ہمیں سیکریٹری داخلہ کے ناقابل ضمانت وارنٹ جاری کرنے پر مجبور نہ کریں ۔

عدالت نے قرار دیا کہ عدالتی حکم کے باوجود حراستی مراکز کے قیدیوں کی فہرست پیش نہیں کی گئی ، کراچی سے لاپتا ہونے والے حراستی مراکز میں ہیں یا نہیں یہ نہیں پتا چل سکا ۔

وزارت داخلہ اتنی بے بس ہے حراستی مراکز کی معلومات نہیں لے سکی؟ طاقتور وزارت جو ٹی ایل پی سے مزاکرات کرسکتی ہے مگر لسٹ نہیں دے سکتی ۔

عدالت نے کہا کہ ایڈوکیٹ جنرل کی پیش کردہ فہرست کے مطابق معلومات لی جائین ،لوگوں کو ان کے بنیادی حق سے بھی محروم کیا جارہا ہے ،ایسا نہ ہو عدالت کی برداشت بھی ختم ہوجائے۔ بعدازاں عدالت نے کیس ملتوی کردیاہے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل لاپتہ افراد کی بازیابی کیس میں سندھ ہائی کورٹ نے  لاپتہ شہری نور محمد عرف بابو کیس میں شہری کی عدم بازیابی پر اظہار برہمی کرتے ہوئے ، آئندہ سماعت پر ایس ایس پی سی ٹی ڈی کو طلب کیا تھا۔

مزید پڑھیں: شہری کی عدم بازیابی، ایس ایس پی سی ٹی ڈی طلب

یہ بھی یاد رہے کہ اس سے قبل نے وفاقی سکریٹری داخلہ سے تمام صوبوں کے حراستی مراکز کی تفصیلات طلب کرنے کا حکم دیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:  سندھ ہائیکورٹ : تمام صوبوں کے حراستی مراکز کی تفصیلات طلب

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *