2 6 808x454

فلسطین کی مدد کے لیے فیصل ایدھی کا بڑا اقدام،امدادی ٹیمیں بھیجنے کا فیصلہ۔۔

40 views

کچھ رہے یا نہ رہے انسانیت زندہ رہنی چاہیے ،معروفی سماجی رہنما عبدالستار ایدھی کے بیٹے اور ایدھی فاؤنڈیشن کے چیئرمین فیصل ایدھی نے 7 مئی سے فلسطین میں جاری اسرائیلی حملوں اور پرتشدد کارروائیوں کے تناظر میں فلسطین میں امدادی ٹیم بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔

صبحین عماد

تفصیلات کے مطابق اس حوالے سے فیصل ایدھی نے پاکستان میں واقع فلسطینی سفارتخانے کو خط لکھا ہے اور امدادی ٹیم بھیجنے کی پیشکش کرتے ہوئے ویزا جاری کرنے کی درخواست کی ہے۔

فلسطینی سفیر کو ارسال کیے گئے خط میں فیصل ایدھی نے کہا  ہے کہ عبدالستار ایدھی کے انسانیت کی خدمت کے مشن کو جاری رکھتے ہوئے ہم اس مشکل وقت میں فلسطین کے لوگوں کی مدد کرنا چاہتے ہیں۔

خط میں کہا گیا کہ ہم ہر سطح پر اور خاص طور پر فلسطین کے لوگوں کو خوراک اور طبی امداد فراہم کرنا چاہتے ہیں۔

خط میں کہا گیا کہ ہم نے انڈونیشیا میں سونامی، پاکستان اور نیپال میں زلزلے اور لبنان-اسرائیل جنگ کے دوران بھی خدمات سرانجام دی تھیں۔

فیصل ایدھی نے کہا کہ ہمیں، جنگ، زلزلے، حادثات اور طوفانوں وغیرہ میں امدادی کارروائیاں سرانجام دینے کا وسیع تجربہ حاصل ہے۔

فیصل ایدھی نے خط میں کہا کہ ‘ہمارے پاس رضاکاروں کی ٹیم موجود ہے جن کے پاس امدادی کام کا تجربہ ہے’۔

خط میں کہا گیا کہ ‘ابتدائی طور پر ہم اسرائیلی حملوں میں متاثر ہونے والوں کو خوراک اور صحت کی سہولیات فراہم کریں گے’۔

مزید پڑھیں: اسرائیلی مظام: جہادی شیر فلسطین والوں تمہیں فتح مبارک ۔۔

مزید کہا گیا کہ ہماری ٹیم سے فیصل ایدھی، محمد احمد، اقرار الحسن، ناصر عزیز اور فیصل ایدھی کے بیٹے سعد ایدھی فلسطین جانے کے لیے تیار ہیں۔

خط میں مزید کہا گیا کہ ہم آپ سے مذکورہ افراد کے ویزا جاری کرنے کی درخواست کرتے ہیں اور فلسطین میں امدادی کارروائیاں شروع کرنے کی اجازت طلب کرتے ہیں۔

 مزید پڑھیں : فلسطین پر مظالم کے خلاف پاکستانی اداکار بھی بول اٹھے ۔۔

فیصل ایدھی نے کہا کہ آپ کا یہ عمل انسانوں اور انسانیت کو بچانے میں ایک اہم کردار ادا کرے گا

خیال رہے کہ فلسطین میں جاری اسرائیلی حملے دوسرے ہفتے میں داخل ہوگئے ہیں

source: Dawn News
content: Sabheen Ammad

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *