bitcoin 808x454

خیبرپختونخوا حکومت کا کرپٹو کرنسی سے متعلق بڑا فیصلہ

45 views

محکمہ سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی خیبرپختونخوا نے کرپٹو کرنسی اور مائننگ کے حوالے سے ایڈوائزری کمیٹی تشکیل دی جسے اب تحلیل کر دیا گیا ہے۔

 غانیہ نورین

دور جدید میں انقلاب برپا کرنے والی ڈیجیٹل کرنسی مزید مشکلات کا شکار ہوگئی، یورپی ممالک میں مختلف خدشات کے بعد پاکستان میں بھی ڈیجیٹل کرنسی کی مائننگ خسارے میں پڑتی نظر آرہی ہے، کیونکہ کے پی کے حکومت نے کرپٹو کرنسی کے لیے بنائی گئی کمیٹی کو تحلیل کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔

مزید پڑھیں:بٹ کوائن کی قیمت اچانک زمین پر کیوں آگئی؟؟؟

جس کے لیے محکمہ سائنس اینڈ ٹیکنالوجی خیبرپختونخوا حکومت نے باقاعدہ ایڈوائزری بھی جاری کردیا ہے جس کے مطابق اعلامیے کے مطابق ڈیجیٹل کرنسی اور کرپٹومائننگ سے متعلق فیصلہ وفاقی حکومت کرے گی۔ حکومت کا کہنا ہے کہ مشیربرائے سائنس ایند ٹیکنالوجی ضیا اللہ بنگش بھی استعفیٰ دے چکےہیں۔

خیال رہے کہ خیبرپختونخوا حکومت نے بڑھتی ہوئی عالمی کرپٹوکرنسی مارکیٹ سے فائدہ اٹھانے کے لیے دو پن بجلی سے چلنے والے پائلٹ ’مائننگ فارمز‘ لگانے کا منصوبہ بنایا تھا۔

خیبرپختونخوا اسمبلی نے کرپٹو کرنسی اور مائننگ کے حوالے سے ایڈوائزری کمیٹی بنانے کی قرارداد منظوری کے بعد محکمہ سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی کو سفارشات ارسال کیں اور ایڈوائزری کمیٹی تشکیل دینے کی ہدایت کی۔

مزید پڑھیں: کرپٹو کرنسی بٹ کوائن کا مستقبل کیا ہے؟؟

محکمہ سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی خیبرپختونخوا نے کرپٹو کرنسی اور مائننگ کے حوالے سے ایڈوائزری کمیٹی بنائی تھی۔

ایڈوائزری کمیٹی کا کام کرپٹو مائننگ و کرپٹو کرنسی کے حوالے سے ضروری اقدامات، ریسرچ اور قانون سازی میں معاونت کرنا تھا۔

کمیٹی کے چیئرپرسن مشیر سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی خیبرپختونخوا ضیااللہ بنگش جبکہ صوبائی وزیر خزانہ و صحت تیمور سلیم جھگڑا کو سینئر وائس چیئرپرسن مقرر کیا گیا تھا۔

کمیٹی ممبران میں ممبران صوبائی اسمبلی ڈاکٹر سمیرہ شمس، حمیرا خاتون، شگفتہ ملک، وقار ذکا، احمد منظور، ڈاکٹر واجد، منیجنگ ڈائریکٹر خیبرپختونخوا انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ علی محمود، ڈائریکٹر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی خالد خان، محکمہ منصوبہ بندی و ترقی اور محکمہ سائنس و انفارمیشن ٹیکنالوجی خیبرپختونخوا کا نمائندہ بھی شامل تھا۔

مزید پڑھیں: کیا کرپٹو کرنسی ماحولیات کے لئے نقصان دہ ہے؟؟

دوسری جانب کچھ روز قبل وقار زکاء نے اپنے ٹوئٹ کے ذریعے بھی پیغام دیا تھا کہ خیبر پختونخوا حکومت کی جانب سے اُنہیں ماہرِ کرپٹو کرنسی مقرر کیا گیا ہے اور وہ کرپٹو کرنسی کی خدمات کے عوض حکومت سے کوئی معاوضہ نہیں لیں گے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل بھی معروف میزبان وقار ذکاء کرپٹو کرنسی کی پاکستان میں مائننگ کیلئے زور دے چکے ہیں جس کے لیے انہوں نے وزیراعظم عمران خان کو ملک کا قرضہ اتارنے کا بھی بڑا دعویٰ کیا تھا۔

مزید پڑھیں: وقار ذکا کا وزیراعظم کو چیلنج، ٹوئٹر پر ہنگامہ

 Source: Samaa
Content:Ghania Naureen
مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *