کورونا : سندھ میں اسکول،ہوٹلز اور تفریحی مقامات ایک بار پھر بند کرنے کا فیصلہ

کورونا : سندھ میں اسکول،ہوٹلز اور تفریحی مقامات ایک بار پھر بند کرنے کا فیصلہ

31 views

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیرصدارت اجلاس میں کورونا کے بڑھتے کیسز کے سبب اسکولوں سمیت تعلیمی ادارے ، عوامی پارکس اور ہوٹل جمعہ سے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ کی زیرصدارت صوبائی کوویڈ ٹاسک فورس کا اجلاس منعقد ہوا۔ سیکرٹری صحت کاظم جتوئی نے بریفنگ کے دوران بتایا کہ سندھ میں نئے کیسز کی شرح بڑھ کر 7.4 فیصد ہو گئی ہے جو خطرناک صورتحال ہے۔

انہوں نے کہا کہ گذشتہ روز 16262 ٹیسٹ کیے گئے جن میں سے 1201 افراد کورونا سے متاثر نکلے۔

اجلاس میں کورونا کے بڑھتے کیسز پر شدید تشویش کا اظہار کیا گیا اور دوبارہ پابندیاں لگانے کا فیصلہ کیا گیا جس کے تحت اسکول اور تمام تعلیمی ادارے جمعہ سے اور انڈور ڈائننگ کو کل رات سے بند کر دیا جائے گا۔

مزید پڑھیں: احتیاط بھارتی ڈیلٹا وائرس آگ سے بھی زیادہ خطرناک ہے

اجلاس میں تفریحی پارکس، واٹر پارکس، سی ویو، ہاکس بے، کینجھرجھیل بھی جمعہ سے بند کرنے پر اتفاق کیا گیا جبکہ سینما ، انڈور جمز اور انڈور کھیلوں پر بھی پابندی ہو گی۔

بریفنگ کے دوران بتایا گیا کہ سندھ میں گزشتہ ایک ہفتے کے دوران مختلف قسم کے 356 کیسز ظاہر ہوئے ہیں، یوکے ویرینٹ کے 92، جنوبی افریقا کے 162، برازیل کے 29، بھارت کے 66، پی ون کے 3 اور وائلڈ ٹائپ کا ایک کیس ظاہر ہوا ہے، اب تک ویکسین کے 58 لاکھ 70 ہزار 991 خوراکیں موصول ہوئی ہیں، جن میں سے ابھی تک 44 لاکھ 65 ہزار 908 خوراکیں استعمال ہوچکی ہیں۔

اجلاس کے دوران وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ 5 فیصد سے کوویڈ کیسز بڑھے تو یہ خطرناک صورتحال ہے، کراچی میں صورتحال کافی خراب ہے۔

مزید پڑھیں: کورونا کی نئی قسم،تیسری لہر پہلے سے بھی خطرناک

خیال رہے کہ سندھ میں کورونا سے ہلاکتوں کی تعداد 5 ہزار 621 تک پہنچ چکی ہے جبکہ ملک بھر میں وائرس سے مرنے والوں کی مجموعی تعداد 22 ہزار 642 ہے۔

Source: Media Reports

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *