3 8 808x454

خوشخبری: پی ٹی آئی کا کراچی میں نئی بس سروس لانے کا اعلان۔

25 views

تحریک انصاف حکومت کی جانب سے گرین لائن منصوبے کے بعد اب ایک اور بس سروس شروع کرنے کا اعلان کردیا ہے

صبحین عماد

رپورٹ کے مطابق وفاقی وزیر برائے بحری امور علی حیدر زیدی نے اتوار کو اعلان کیا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کی حکومت کراچی میں ایک نئی بس سروس شروع کرے گی۔

انہوں نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ وفاقی حکومت پورٹ قاسم اور کراچی پورٹ ٹرسٹ (کے پی ٹی) کے درمیان بس سروس چلائے گی تاکہ ملازمین اور لوگوں کی سہولت ہو۔ پی ٹی آئی حکومت 40 سے زائد نئی بسیں خریدے گی

وزیر نے مزید اعلان کیا کہ وفاقی حکومت نے میٹروپولیس میں بھاری ٹریفک کے لیے ایک علیحدہ پل تعمیر کرنے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ حادثات سے بچا جا سکے۔

میٹروپولیس میں ٹریفک کے مسئلے کو حل کرنے کے لیے ، وزیر نے کہا کہ وہ ٹریفک کے آزاد بہاؤ کو یقینی بنانے کے لیے فلائی اوور تعمیر کریں گے۔

ایک سوال کے جواب میں علی زیدی نے کہا کہ حکومت کے پی ٹی کی زمین کو لیز پر نہیں دینے دے گی۔

ہفتے کو وفاقی وزیر منصوبہ بندی ، ترقی اور خصوصی اقدامات اسد عمر نے کہا کہ 40 گرین لائن بی آر ٹی بسوں کی پہلی کھیپ اگلے ہفتے کراچی بندرگاہ پہنچے گی۔

انہوں نے کے پی ٹی پورٹ ہاؤس کراچی میں وفاقی وزیر میری ٹائم افیئرز سید علی حیدر زیدی کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے اس کی نقاب کشائی کی۔

انہوں نے اعلان کیا کہ گرین لائن بس سروس رواں سال نومبر میں کراچی میں چل جائے گی۔

گرین بس سروس کا افتتاح کب ہوگا؟؟

ورنر سندھ عمران اسماعیل نے ایک ماہ بعد کراچی میں گرین لائن منصوبے کا افتتاح کرنےکا اعلان کردیا۔

کراچی میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئےگورنر سندھ عمران اسماعیل کا کہنا تھا کہ کے سی آر منصوبہ وفاق کی ترجیحات میں شامل ہے،  ایک ماہ بعد گرین لائن بس منصوبے کا بھی افتتاح کریں گے۔

گورنر سندھ کا کہنا تھا کہ میں خود گرین لائن منصوبے کو مانیٹر کر رہا ہوں،  ابھی تک کراچی میں ٹرانسپورٹ بہتر کرنے کا سسٹم نہیں بن سکا۔

ان کا کہنا تھا کہ حالیہ برساتوں میں جس کا دل چاہتا ہےکریڈٹ لینے لگ جاتا ہے،  روڈ پر جو حضرات نکلے ہیں وہ کام کرکے دکھائیں، کراچی کے تین بڑے نالوں پر وفاق نےکام کرایا ہے۔

گرین لائن منصوبہ بربادی جانب۔

اربوں روپے کی لاگت سے بنے کراچی کی گرین لائن منصوبے کو برباد کیا جارہا ہے

22 بس اسٹیشنوں کی تعمیر کے لیے منگوایا گیا سامان جس میں پاور کیبل، موٹریں، ایلومینیم شیٹس، کرسیاں، ایلیویٹرز، دھاتی چادریں چوری ہونے کی وارداتوں میں اضافہ ترقیاتی کاموں میں سست روی کا سبب بن گیا ہے۔

فروری 2016 میں سابق وزریر اعظم نوازشریف نے کراچی میں گرین لائن ریپڈ بس سروس منصوبے کا سنگ بنیاد رکھا جسے دو سال میں مکمل ہونا تھا لیکن ساڑھے چار سال گزر جانے کے باوجود بھی منصوبہ مکمل ہونے کے دور دور تک آثار دکھائی نہیں دیتے ہیں۔

سال 2018 میں وفاقی حکومت تبدیل ہونے کے بعد جہاں کئی منصوبے کھٹائی میں پڑگئے وہیں گرین لائن منصوبہ بھی تاحال لٹک گیا ہے۔ کراچی کے شہری اب بھی منتظر ہیں کہ گرین لائن منصوبے پر بسیں کب چلیں گی اور شہریوں کو باعزت سفری سہولت کب میسر آئے گی۔

گرین لائن منصوبوں پر کام کرنے کے لیے کراچی انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ کمپنی لمیٹڈ قائم کی گئی تھی، جس کا نام بعد میں تبدیل کرکے سندھ انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ کمپنی لمیٹڈ رکھ دیا گیا تھا۔

source: ary news

content: sabheen ammad

مصنف کے بارے میں

راوا ڈیسک

راوا آن لائن نیوز پورٹل ہے جو تازہ ترین خبروں، تبصروں، تجزیوں سمیت پاکستان اور دنیا بھر میں روزانہ ہونے والے واقعات پر مشتمل ہے

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Your email address will not be published. Required fields are marked *